سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(184) بہن کی سوکن بیٹیوں سے نکاح کرنا

  • 9639
  • تاریخ اشاعت : 2014-01-29
  • مشاہدات : 554

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

میری بہن ایک شخص کی بیوی ہے جبکہ اس کی ایک بیوی اورر بھی ہے اور ان میں سے ہر ایک نے دوسری کے بچوں کو دودھ بھی پلایا ہے اور اس پہلی بیوی کی کچھ بڑی بیٹیاں بھی ہیں، جنہوں نے میری بہن کا دودھ نہیں پیا تو کیا ان میں سے کسی ایک سے میرے لئے شادی کرنا جائز ہے یا نہیں؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

اگر امر واقعی اسی طرح ہے جیسا کہ آپ نے سوال میں ذکر کیا ہے تو آپ کے لئے اپنی بہن کی سوکن کی ان بیٹیوں میں سے کسی ایک سے شادی کرنے میں کوئی حرج نہیں ہے، جن کو آپ کی بہن نے دودھ نہ پلایا ہو بشرطیکہ آپ کے اور ان کے مابین قرابت اور رضاعت کا کوئی اور ایسا تعلق بھی نہ ہو جو موجب حرمت ہو۔

ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب

فتاویٰ اسلامیہ

ج3ص156

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ